Health Corner

What is Cancer? Causes, Foods to avoid (English/Urdu)

Cancer is something that nobody, literally nobody deserves whether it’s curable or incurable. Before going any further, let’s first understand what actually cancer is and how it affects our body. Here in this article, you will go thru the main causes and precautions to get rid of this disease and Foods that a patient should avoid. You must also know about Good Foods for cancer patients to get rid of this acute disease.

Almost everybody knows that the human body is made up of cells. Every cell has a certain age and after that age, that cell dies and the newly produced cell takes its place. So, this is basically the order of nature. The problem (cancer) arises when this orderly process is disturbed. Cells start to grow uncontrollably and they form a mass which is called a “tumor”. This tumor can be of two types: one which spreads to other body parts and the other which stays on the same part where it started. The first one is referred to as ‘malignant’ and the latter one is called ‘benign’.

تقریباً ہر کوئی جانتا ہے کہ انسانی جسم خلیات سے بنا ہے۔ ہر خلیے کی ایک خاص عمر ہوتی ہے اور اس عمر کے بعد وہ خلیہ مر جاتا ہے اور اس کی جگہ نیا پیدا ہونے والا خلیہ لے لیتا ہے۔ تو یہ بنیادی طور پر قدرت کا حکم ہے۔ مسئلہ (کینسر) اس وقت پیدا ہوتا ہے جب اس منظم عمل میں خلل پڑتا ہے۔ خلیے بے قابو ہو کر بڑھنے لگتے ہیں اور وہ ایک بڑے پیمانے پر تشکیل پاتے ہیں جسے “ٹیومر” کہا جاتا ہے۔ یہ رسولی دو طرح کی ہو سکتی ہے: ایک جو جسم کے دوسرے حصوں میں پھیل جاتی ہے اور دوسری جو اسی حصے پر رہتی ہے جہاں سے یہ شروع ہوئی تھی۔ پہلے والے کو ‘مہلک’ کہا جاتا ہے اور بعد والے کو ‘سومی’ کہا جاتا ہے۔

Factors that cause cancer:

Now that we have a brief introduction to cancer and how it works, let’s explore how it begins? As we have already discussed that massive amount of cell production is the beginning of this. That is originally a genetic malfunction. However, today’s scientists have proven that it’s not only genes that cause cancer. There are certainly other factors that may be responsible for it such as the environment and individual characteristics of the patient. There are some risk factors that may cause this disease. Exposure to these risk factors may lead an individual to cancer. According to recent research in the UK scientists have divided the causes of cancer into five main categories i.e.:

  1. Lifestyle:

There is a number of bad habits in our daily lifestyle which may lead us to cancer unknowingly. They include:

  • Obesity
  • Tobacco
  • Alcoholism
  • Unprotected sex
  • Overconsumption of red meat
  • Genes, family history, and inheritance:

It is possible to inherit cancer from your family through genes. According to recent research, every individual inherits the genes of his/her ancestors in their chromosomes. Therefore it is possible to inherit cancer from family.

2. Defected immune system:

The immune system is the natural defense system of our body. When stem cells (the bone marrow cells) become infected they produce more infected cells which spread cancer.

3. Contact with special kinds of viruses:

One and unfortunately most common example of this type of cancer is called AIDS which happens due to the HIV virus. Here, the virus alters the cell and more altered cells are produced hence causing cancer.

4. Environment:

There are certain substances in our environment that may damage our DNA hence causing cancer. Such as:

  • Too much exposure to UV rays
  • Frequent exposure to certain chemicals
  • Chemotherapy and radiation
  • Radioactive atmosphere

کینسر کا سبب بننے والے عوامل

اب جب کہ ہمارے پاس کینسر کا ایک مختصر تعارف ہے اور یہ کیسے کام کرتا ہے، آئیے دریافت کریں کہ یہ کیسے شروع ہوتا ہے؟ جیسا کہ ہم پہلے ہی بحث کر چکے ہیں کہ سیل کی بڑی مقدار کی پیداوار کینسر کی شروعات ہے۔ یہ اصل میں ایک جینیاتی خرابی ہے۔ تاہم، آج کے سائنسدانوں نے ثابت کیا ہے کہ یہ صرف جینز نہیں ہیں جو کینسر کا سبب بنتے ہیں۔ یقینی طور پر اور بھی عوامل ہیں جو کینسر کے لیے ذمہ دار ہو سکتے ہیں جیسے ماحول اور مریض کی انفرادی خصوصیات۔ کچھ خطرے والے عوامل ہیں جو کینسر کا سبب بن سکتے ہیں۔ ان خطرے والے عوامل کی نمائش کسی فرد کو کینسر کا باعث بن سکتی ہے۔ برطانیہ میں ہونے والی حالیہ تحقیق کے مطابق سائنسدانوں نے کینسر کی وجوہات کو پانچ اہم اقسام میں تقسیم کیا ہے یعنی

. طرز زندگی

ہمارے روزمرہ کے طرز زندگی میں بہت سی بری عادات ہیں جو ہمیں انجانے میں کینسر کا باعث بن سکتی ہیں۔ ان میں شامل ہیں: • موٹاپا • تمباکو • شراب نوشی • غیر محفوظ جنسی تعلقات • سرخ گوشت کا زیادہ استعمال

. جینز، خاندانی تاریخ، اور وراثت: جینز کے ذریعے آپ کے خاندان سے کینسر کا وارث ہونا ممکن ہے۔ حالیہ تحقیق کے مطابق، ہر فرد کو ان کے کروموسوم میں اپنے آباؤ اجداد کے جینز ورثے میں ملتے ہیں۔ اس لیے خاندان سے کینسر کا وارث ہونا ممکن ہے۔

. خراب مدافعتی نظام: مدافعتی نظام ہمارے جسم کا قدرتی دفاعی نظام ہے۔ جب سٹیم سیل (بون میرو سیل) متاثر ہو جاتے ہیں تو وہ زیادہ متاثرہ خلیات پیدا کرتے ہیں جو کینسر پھیلاتے ہیں۔

. خاص قسم کے وائرس سے رابطہ: اس قسم کے کینسر کی ایک اور بدقسمتی سے سب سے عام مثال ایڈز کہلاتی ہے جو ایچ آئی وی وائرس کی وجہ سے ہوتا ہے۔ یہاں، وائرس سیل کو بدل دیتا ہے اور زیادہ تبدیل شدہ خلیے پیدا ہوتے ہیں اس لیے کینسر کا باعث بنتے ہیں۔

. ماحولیات: ہمارے ماحول میں کچھ ایسے مادے ہیں جو ہمارے ڈی این اے کو نقصان پہنچا سکتے ہیں اس لیے کینسر کا باعث بنتے ہیں۔ جیسا کہ: • UV شعاعوں کی بہت زیادہ نمائش • بعض کیمیکلز کا بار بار نمائش • کیموتھراپی اور تابکاری • تابکار ماحول

Foods to avoid in Cancer:

Now if unluckily one is suffering from cancer, in this situation body needs extra care in terms of food. This is because not only the disease but the treatment of cancer itself also drain the body. During this time the patient feels extra weakness due to loss of appetite, nausea, diarrhea, loss of taste, constipation, etc. Therefore, eating the right food is key to recovery.  There should be certain foods that should be completely avoided. That is because some foods may cause food poisoning, pain, or make you more ill. Some of the foods to avoid include:

  1. Raw dairy products:

Raw dairy products such as raw milk, raw yogurt or raw cheese, etc. are not pasteurized. This means that they are full of bacteria. A healthy human body with a good immune system can take care of such types of bacteria. However, a cancer-suffering body that has a weak immune system can suffer a lot due to these bacteria in terms of infection.

Similarly, raw eggs or undercooked eggs also fall in this category. Because they contain a bacteria named salmonella. This type of bacteria can also cause severe infection for a cancer suffering body.

  • Unwashed fruits and vegetables:

No matter whether you have grown your produce yourself or you have bought it from the store. Always wash your fruits and vegetables before consuming them. The fruits and vegetables, especially those that have leaves on them contain bacteria that may make you ill. An already ill-cancer body may not cope with this type of bacteria.

  • Undercooked or raw fish and other seafood:

Undercooked seafood contains a special type of bacteria that not only makes the body ill but also severely damages the immune system. Therefore this type of food should be avoided anyway.

  • Undercooked red meat:

Just like raw seafood, raw meat also contains bacteria which damages the immune system. Therefore if you like to have non-veg, then make sure that it is properly and entirely cooked.

  • Junk food:

You should avoid junk food if you are undergoing cancer treatment. Because this type of food does not contain the required nutrients that your body needs. On the other hand, junk food contains extra salt and spices that dehydrate the body. During cancer treatment hydrating your body is equally important as the medicines are. Therefore cancer patients should avoid junk food.

  • Spicy food:

It is common during cancer treatment that the patient suffers from nausea, vomiting, or sores in the mouth and throat. Consuming spicy food may worsen the sores hence causing immense pain and discomfort to the patient. Therefore spicy and strong-flavored foods should be avoided by cancer patients.

  • Dehydrating drinks and food:

There are some foods and drinks that dehydrate our body such as salty food and drinks containing alcohol and caffeine. Cancer patients should avoid such types of food and drinks at any cost to stay hydrated.

  • Raw sprouts:

Raw sprouts may taste really good but they also should be avoided by cancer patients. These sprouts contain bacteria such as E.coli which doesn’t get washed even after washing the product. This impurity can really mess with an already suffering immune system. Therefore this should be avoided.

  • Leftover food:

Leftover food which has been at room temperature for more than two hours should not be consumed by cancer patients. Because being there for such a long time has welcomed bacteria and the food has been contaminated.

  1. Cold food and drinks:

Cold food and cold drinks such as soda drinks and ice creams or desserts should be avoided by cancer patients. An already sore throat and sore mouth condition can get worse due to such type of food.

پرہیز کرنے والی غذائیں

اب اگر بدقسمتی سے کوئی کینسر میں مبتلا ہے تو اس صورت حال میں جسم کو خوراک کے معاملے میں اضافی دیکھ بھال کی ضرورت ہے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ نہ صرف بیماری بلکہ خود کینسر کا علاج بھی جسم کو نکال دیتا ہے۔ اس دوران مریض بھوک میں کمی، متلی، اسہال، ذائقہ میں کمی، قبض وغیرہ کی وجہ سے اضافی کمزوری محسوس کرتا ہے، اس لیے صحیح کھانا کھانا صحت یابی کی کلید ہے۔ کچھ غذائیں ایسی ہونی چاہئیں جن سے مکمل پرہیز کیا جائے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ کچھ غذائیں فوڈ پوائزننگ، درد، یا آپ کو مزید بیمار کر سکتی ہیں۔ پرہیز کرنے کے لئے کچھ کھانے میں شامل ہیں

. خام دودھ کی مصنوعات:

کچی ڈیری مصنوعات جیسے کچا دودھ، کچا دہی یا کچا پنیر وغیرہ پیسٹورائزڈ نہیں ہیں۔ اس کا مطلب ہے کہ وہ بیکٹیریا سے بھرے ہوئے ہیں۔ ایک صحت مند انسانی جسم جس کا مدافعتی نظام اچھا ہے اس قسم کے بیکٹیریا کا خیال رکھ سکتا ہے۔ تاہم، ایک کینسر کا شکار جسم جس کا مدافعتی نظام کمزور ہو، انفیکشن کے معاملے میں ان بیکٹیریا کی وجہ سے بہت زیادہ نقصان اٹھا سکتا ہے۔ اسی طرح کچے انڈے یا کم پکے ہوئے انڈے بھی اسی زمرے میں آتے ہیں۔ کیونکہ ان میں سالمونیلا نامی بیکٹیریا ہوتا ہے۔ اس قسم کے بیکٹیریا کینسر میں مبتلا جسم کے لیے شدید انفیکشن کا سبب بھی بن سکتے ہیں۔

بغیر دھوئے ہوئے پھل اور سبزیاں:

اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا ہے کہ آپ نے اپنی پیداوار خود اگائی ہے یا آپ نے اسے اسٹور سے خریدا ہے۔ اپنے پھلوں اور سبزیوں کو کھانے سے پہلے ہمیشہ دھو لیں۔ پھل اور سبزیاں، خاص طور پر جن پر پتے ہوتے ہیں ان میں بیکٹیریا ہوتے ہیں جو آپ کو بیمار کر سکتے ہیں۔ پہلے سے بیمار کینسر والا جسم اس قسم کے بیکٹیریا کا مقابلہ نہیں کر سکتا۔

. کچی مچھلی اور دیگر سمندری غذا

کم پکا ہوا سمندری غذا میں ایک خاص قسم کے بیکٹیریا ہوتے ہیں جو نہ صرف جسم کو بیمار کرتے ہیں بلکہ مدافعتی نظام کو بھی شدید نقصان پہنچاتے ہیں۔ اس لیے اس قسم کے کھانے سے بہرحال پرہیز کرنا چاہیے۔

کم پکا ہوا سرخ گوشت

کچے سمندری غذا کی طرح کچے گوشت میں بھی بیکٹیریا ہوتے ہیں جو مدافعتی نظام کو نقصان پہنچاتے ہیں۔ اس لیے اگر آپ نان ویج کھانا پسند کرتے ہیں تو اس بات کو یقینی بنائیں کہ یہ مناسب طریقے سے اور پوری طرح پکا ہوا ہے۔

جنک فوڈ:

اگر آپ کینسر کے علاج سے گزر رہے ہیں تو آپ کو جنک فوڈ سے پرہیز کرنا چاہیے۔ کیونکہ اس قسم کے کھانے میں وہ ضروری غذائی اجزاء نہیں ہوتے جو آپ کے جسم کو درکار ہوتے ہیں۔ دوسری طرف جنک فوڈ میں اضافی نمک اور مصالحے ہوتے ہیں جو جسم کو پانی کی کمی کا باعث بنتے ہیں۔ کینسر کے علاج کے دوران آپ کے جسم کو ہائیڈریٹ کرنا اتنا ہی ضروری ہے جتنا کہ دوائیاں۔ اس لیے کینسر کے مریضوں کو جنک فوڈ سے پرہیز کرنا چاہیے۔

. مسالیدار کھانا:

کینسر کے علاج کے دوران یہ عام بات ہے کہ مریض کو متلی، الٹی، یا منہ اور گلے میں زخم ہو جاتے ہیں۔ مسالہ دار کھانا کھانے سے زخم مزید خراب ہو سکتے ہیں جس کی وجہ سے مریض کو شدید درد اور تکلیف ہوتی ہے۔ اس لیے کینسر کے مریضوں کو مسالے دار اور سخت ذائقہ دار کھانوں سے پرہیز کرنا

پانی کی کمی کو دور کرنے والے مشروبات اور خوراک

کچھ کھانے اور مشروبات ایسے ہیں جو ہمارے جسم کو پانی کی کمی کا باعث بنتے ہیں جیسے نمکین کھانے اور مشروبات جن میں الکحل اور کیفین ہوتے ہیں۔ کینسر کے مریضوں کو ہائیڈریٹ رہنے کے لیے اس قسم کے کھانے اور مشروبات سے پرہیز کرنا چاہیے۔

. کچے انکرت:

کچے انکروں کا ذائقہ بہت اچھا ہو سکتا ہے لیکن کینسر کے مریضوں کو ان سے بھی پرہیز کرنا چاہیے۔ ان انکروں میں E.coli جیسے بیکٹیریا ہوتے ہیں جو مصنوعات کو دھونے کے بعد بھی نہیں دھوتے۔ یہ ناپاکی واقعی پہلے سے مبتلا مدافعتی نظام کے ساتھ گڑبڑ کر سکتی ہے۔ اس لیے اس سے بچنا چاہیے۔

. بچا ہوا کھانا:

بچا ہوا کھانا جو کمرے کے درجہ حرارت پر دو گھنٹے سے زیادہ رہے، کینسر کے مریضوں کو نہیں کھایا جانا چاہیے۔ کیونکہ اتنے لمبے عرصے تک وہاں رہنے نے بیکٹیریا کا استقبال کیا ہے اور کھانا آلودہ ہو گیا ہے۔

. ٹھنڈا کھانا اور مشروبات:

کینسر کے مریضوں کو ٹھنڈا کھانا اور کولڈ ڈرنکس جیسے سوڈا ڈرنکس اور آئس کریم یا میٹھے سے پرہیز کرنا چاہیے۔ پہلے سے ہی گلے کی خراش اور منہ کی خراش اس قسم کے کھانے کی وجہ سے خراب ہو سکتی ہے۔

Conclusion:

Cancer is a treatable disease. Like every other disease, cancer treatment also has some protocol. To follow this protocol a certain diet should be adopted and a few things should be avoided. However, consultation with your doctor is extremely important. For the reason that every patient doesn’t respond to the treatment in the same manner. Therefore having a diet plan approved by your corresponding doctor is necessary.  

نتیجہ

کینسر ایک قابل علاج مرض ہے۔ ہر دوسری بیماری کی طرح کینسر کے علاج میں بھی کچھ پروٹوکول ہوتا ہے۔ اس پروٹوکول پر عمل کرنے کے لیے ایک مخصوص خوراک کو اپنانا چاہیے اور چند چیزوں سے پرہیز کرنا چاہیے۔ تاہم، آپ کے ڈاکٹر کے ساتھ مشاورت بہت ضروری ہے. اس وجہ سے کہ ہر مریض ایک ہی انداز میں علاج کا جواب نہیں دیتا ہے۔ لہذا آپ کے متعلقہ ڈاکٹر کے ذریعہ منظور شدہ ڈائیٹ پلان کا ہونا ضروری ہے

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

Back to top button
Close
Close